بلاول بھٹو کے ٹرین مارچ کے خلاف خبر دینے والے صحافی کو کیوں قتل کیا گیا؟اے آئی جی سندھ نے وجہ بتا دی

نوابشاہ(سی پی پی ) ایڈیشنل انسپکٹر جنرل سندھ غلام نبی میمن نے انکشاف کیا ہے کہ صحافی عزیز میمن کی طبی موت نہیں ہوئی بلکہ انہیں قتل کیا گیا ،قتل کا ماسٹر مائنڈ مشتاق سہتو ہے ، نذیر سہتو نے بھی اپنے جرم کا اعتراف کر لیا ہے۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ملزمان نے خود کوچھپانے کی بہت کوشش کی لیکن قانون کی گرفت سے نہ بچ سکے، تفتیش کے دوران تمام اداروں نے مکمل تعاون کیا، قتل کیس میں اب تک تین ملزمان کو گرفتار کیا جا چکا ہے، مزید پانچ کو گرفتار کرنا ہے۔انہوں نے بتایا کہ اعترافی بیان کے بعد ملزم نذیر سہتو کو جوڈیشل اور دیگر دو ملزمان کو ایک روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا گیا ہے۔ عزیز میمن کو دشمنی پرقتل کیا گیا، ملزم نذیر سہتو کا ڈی این اے میچ کر گیا، نذیر نے تفتیش کے دوران مزید ملزمان کےنام بھی بتائے اور عدالت میں اپنے جرم کا اعتراف کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں